Jump to content


Most Liked Content


#2471 Aj Ki Baat

Posted by Seems Aftab on 30 May 2012 - 02:01 PM

..✿... A a j - K i - B a a t ...✿..

شرافت سے جھکا ہوا سر ندامت سے جھکے سر سے بہتر ہے


A head bowed with nobility is better than a head bowed by regret.




#59 Humorous Side of Pakistan

Posted by Abdullah on 17 May 2012 - 01:09 PM

Posted Image

Isi liye ham Baalon ko Root say Khatam karnay ka Ehd ka chukay hain (ADB)


#35045 A simple dedication to HULCHUL

Posted by Humaira Noor on 28 November 2013 - 11:27 AM

Assalam o Alaikum

 

Hope all are gud & enjoying (YAHOO)

Yaad to akser aati hay mujay bhi but aaj miss ziada kia to main apnay gher (Hulchul) again aa gai :)

 

Ho raat akeli pichlay peher

Aur chand angan main aa jaye

 

Tum chand ki tarhan tanha ho

Yeh baat tumhain tarpa jaye

 

Kuch khawb saja ker palkon pay

Tum chand say batain ker laina

 

Hum yaad tumhain to kartay hain

Tum yaad hamain bhi ker laina

 

Kuch baat na ho jub aisay hi

Num aankh tumhari ho jaye

 

Tum baat kahin per kartay ho

Dil aur kahin per kho jaye

 

Jazbat k aisay alam main

Muskan labon per bhar lena

 

Hum yaad tumhain to kartay hain

Tum yaad hamain bhi ker laina (F) (F) (F)




#755 "Hum aor humari aoqaat"

Posted by Aasim on 21 May 2012 - 01:19 AM

Posted Image




#6216 Mohabbat

Posted by Humaira Noor on 28 June 2012 - 02:44 PM

Kitabon say dala'el doon, ya khud ko samnay rakh doon ! ! !
Wo mujh say pooch betha hay, mohabbat kis ko kehtay hain


#9850 beopari

Posted by possible on 24 August 2012 - 07:09 PM

Hum Khuwabon K Beopari Thay


Par Is Main Hua Nuqsan Bara


Kuch Bakht Main Dhai'roon Kalak Thi


Kuch Ab K Ghazab Ka Kaal Para


Hum Raakh Leyeh Hain Jholi Men


Or Sar Pay Hay Sahoo'kaar Khara



Yahan Boond Nahi Hay Dee'way Main


Who Bhajh Bai'Yajh Ke Baat Karay


Hum Baanjh zZmeen Ko Taktay Hain


Who Dhor Anaj Ki Baat Karay


Hum Kuch Din Ke Mohlat Mangain


Who Aaj He Aaj Ke Baat Karay

Jab Dharti Sehra Sehra Thi


Hum Darya Darya Royee Thay


Jab Haath Ki Rai'khaen Chup Thi


Or Sur Sangeet Men Soyee Thay


Tab Hum Ne Jeevan'Ghaati Men


Kuch Khuwab Ano'khay Boyee Thay


Kuch Khuwab Sajal Muskanoo K


Kuch Bol Kibat Deewanoo K


Kuch Lafz Jin'hain Maani Na Milay


Kuch Geet Shakista Janoo K


Kuch Neer Wafa Ki Shamoo K


Kuch Par'Pagal Parwanoo K


Phir Apni Ghayal Aankhon Say


Khush Ho K Lahoo Chir'kaya Tha


Maati Main Mass Ke Khaad Bhari


Or Nas Nas Ko Zakh'maya Tha


Or Bhool Gayee Pichli Rut Main


Kya Khoya Tha Kya Paya Tha

              




#6576 Poetry on Image (Weekly)

Posted by saza-e-ishq on 04 July 2012 - 01:52 PM

Dasht main piyaas bhujatey howey mar jatey hain
Hum parinday kaheen jatey howey mar jatey hain

Hum hain sookhay howey talaab pay baithy howey hans
Jo ta.alluq ko nibhatey howey mar jatey hain

Un kay bhee qatl kaa ilzaam humarey sar hay
Jo humain zehar pilatey howey mar jatey hain

Yeh mohabbat kee kahanee nahee martee laikin
Log kirdaar nibhatey howey mar jatey hain

Hum hain woh tootee howee kashtion waley faraz
Jo kinaron ko milatey howey mar jatey hain




#6337 .. Wahi'n Hota Hoo'n!!

Posted by saza-e-ishq on 29 June 2012 - 01:39 PM

..Wahi'n Hota Hoo'n!!



Pyaas  Ashko'n Say Bhujaa-ta Hoo'n ...Wahi'n Hota Hoo'n

Main   Kahi'n  Bhi  Nahi  Jaata Hoo'n ...Wahi'n Hota Hoo'n



Aarzoo'on   Ka Mehal   Tum   Nay   Jahan   Khaak  Kiya

Main  Wahan  Khaak  Uraata  Hoo'n ...Wahi'n Hota Hoo'n



Meray Maabood Mera Waqtay   Qaazaaa Aajaae

Yeh Dua   Maang-ta   Jaata   Hoo'n ...Wahi'n Hota Hoo'n



Kesa  Mehboob   Bhla ?? ...Kaaahay Ka Mehboobay Nazer

Khud Ko Main Khud Say Chupata Hoo'n Wahi'n Hota Hoo'n



Apnay   Tukyay   Ko  Samjh   Layta  Hoo'n Teraa   Paiker

Khud   Ko  Is Terha'n  Sulaata  Hoo'n ... Wahi'n Hota Hoo'n



Roothna   Tujh  Say  Tassawur  Main  Hai  Mamool  Ki Baat

Phirr..   Tujhay  Roz   Manaata  Hoo'n ... Wahi'n Hota Hoo'n



Dil  Ko  Behlaata  Hoo'n  Kuch   Is  Terha'n  Tunhaai  Main

Teray.. Ash-aar Sunaata Hoo'n  ...Wahi'n Hota Hoo'n


Meray Apne Qalam Say




#4322 matt choor k jana...

Posted by Mehar Naqvi on 10 June 2012 - 06:40 PM

Suno!


Tum Azm Walay Ho
Bala Ka Zabt Rakhtay Ho
Tumhain Kuch Bhi Nahi Hoga
Magar Dekho


Jisay Tum Chhoray Jatay Ho
Usay Tou Theek Se Shayad
Bichharna Bhi Nahi Aata

Suno!
Tum Azam Walay Ho
Usay Matt Chor Ke jana




#40286 kaRb

Posted by shahrafiq on 06 March 2015 - 07:25 PM

huM khak nasEesh'no ko heerat sy Na tak

hum kaRb sy guzray haiN karAamat sy pahlY




#401 Hamari Ikhlaqi Pasti

Posted by Seems Aftab on 19 May 2012 - 02:11 PM

پچھلے دنوں میں اپنے دوست کے ہمراہ جارہا تھا کہ راستے میں ایک گاڑی تیزی سے ہمارے آگے سے گزری۔ اس گاڑی کے عقبی شیشوں پر بہت نمایاں اور واضح انداز میں دو جملے لکھے ہوئے تھے جو کچھ اس طرح تھے۔

I am a Play boy
Girls are my toy

یہ دو سطریں پڑھ کر ہم دونوں دنگ رہ گئے۔ہماری حیرت ان جملوں کے مفہوم سے زیادہ لکھنے والے کے حوصلے پر تھی کہ اس نے اپنی گاڑی پر یہ جملہ ایک چلتے پھرتے اشتہار کی شکل میں لکھ رکھا تھا۔ ہمارے معاشرے میں بدکردار ہونا شائد کوئی بہت بڑی بات نہ ہو مگر اس کا اس طرح علانیہ اظہار کرنے کا رواج ابھی تک نہیں پڑھا۔مگر یہ پڑھ کر لگتا تھا کہ اب اس رواج کے دن بھی گنے جاچکے ہیں۔

ہمارے معاشرے میں سانحہ یہ ہے کہ ایک طرف وہ لوگ ہیں جو اپنی حد کو عبور کرکے دوسروں پر زبردستی دین نافذ کرنے کے خواہشمند رہتے ہیں۔وہ دوسرے لوگوں کو بالجبر برائیوں سے روکنا چاہتے ہیں۔ظاہر ہے کہ یہ رویہ نہ دین کا مطالبہ ہے اور نہ معاشرہ اسے قبول کرسکتا ہے۔ دوسری طرف وہ لوگ ہیں جو اجتماعی خیر و شر سے بے نیاز ہوکر صرف اپنے کام سے کام رکھنے میں مصروف رہتے ہیں۔ ایسے لوگوں کی دینداری کی آخری حد نماز روزہ کی پابندی ہوتی ہے اور ان کے اردگرد جو کچھ ہورہا ہوتا ہے وہ اس سے آنکھیں بند کرلیتے ہیں۔وہ اپنے قریبی لوگوں کے ایسے رویوں کی بھی اصلاح نہیں کرتے جن کے اخلاقی ، معاشرتی اور مذہبی طور پر برا ہونے میں کوئی دو آرا نہیں پائی جاتیں۔ جب نوبت یہاں تک پہنچ جاتی ہے تو پھر لوگ حیا اور اخلاق کے ہر جذبے سے عاری ہوکر اپنی بے لگام حیوانی خواہشات کا اسی طرح اعلان کرنے لگتے ہیں۔یہ اعلانات کسی فرد کی آزادی کا نام نہیں بلکہ معاشرے کے اجتماعی ضمیرپر ایک طمانچہ ہیں۔ جو قوم ایسے طمانچے کھانے پر تیار ہوجائے وہ ایک ایک کرکے ساری اخلاقی خصوصیات سے محروم ہوجاتی ہے۔




#36898 Masroof ;)

Posted by Ashk on 26 February 2014 - 04:14 AM

very nyc selection (F) (F)


عشق کے بعد ہنر کیا کرتے
کچھ بھی کر لیتے،مگر کیا کرتے

کیا سناتے تجھے اپنا احوال
اب تجھے تیری خبر کیا کرتے

ہم کہ خود بیت گئے اوروں پر
ہم بھلا تجھ کو بسر کیا کرتے

ہم جو نغمہ تھے نہ نالہ اے دوست
تجھ پہ کرتے تو اثر کیا کرتے

ہم نہ گر ڈوبنے والے ہوتے
تیری باتوں کے بھنور کیا کرتے




#35 Zanani...

Posted by Seems Aftab on 17 May 2012 - 12:07 AM

بیوی : آپ مجھے طلاق بھی دے دیں تب بھی میں گھر کے دروازے پر بیٹھ جاؤں گی مگر آپ سے دور کبھی نہیں جاؤں گی سُنا آپ نے۔۔۔۔

شوہر : زنانی بن زنانی گیلانی نہ بن۔۔۔۔

:blink: :blink:  




#34102 A Sharing!

Posted by Faith on 22 October 2013 - 06:07 AM

قرب کے نہ وفا کے ہوتے ہیں
جھگڑے سارے انا کے ہوتے ہیں
بات نیت کی صرف ہے ورنہ
وقت سارے دعا کے ہوتے ہیں

بھول جاتے ہیں مت برا کہنا
لوگ پتلے خطا کے ہوتے ہیں

وە بظاہر جو کچھ نہیی لگتے
ان سے رشتے بلا کے ہوتے ہیں...


وە ہمارا ہے اس طرح سے فیض
جیسے بندے خدا کے ہوتے ہیں



#1513 Kon kahan rehta hai

Posted by Aasim on 24 May 2012 - 12:48 AM

Posted Image




#14498 ~*Dua*:/

Posted by ÅwèXømê Afrídì Smîlé on 17 October 2012 - 10:07 AM

Aik KhobSurat  
       "-AITBAAR-"


>>- Agr 'ALLAH' Tumari Dua'en Pori Kr Raha hai
to Wo Tumara "Yaqeen" Barha raha hai.

>>- Agr Dua'en Pori krne me Dair kr raha hai to
Tumara"Sabar" Barha raha hai.

>>- Agr Tumari Dua'on Ka Jawab Nhi de raha
to Wo Tumen "Aazma" raha hai.

Is lie Hamesha "Dua" Mangte Raho
"Dua" Aik Dastak Ki Trah hai
Aur
Bar Bar Dastak Dene Se Darwaza Khulta Zarur hai.

Muje b apne Duwa'o main yad rakna.


#14451 Importance

Posted by Seems Aftab on 16 October 2012 - 03:22 PM

When things in your life seem, almost too much to handle,
When 24 Hours in a day is not enough,
Remember the mayonnaise jar and 2 cups of coffee.

A professor stood before his philosophy class
and had some items in front of him.
When the class began, wordlessly,
He picked up a very large and empty mayonnaise jar
And proceeded to fill it with golf balls.

He then asked the students, if the jar was full.
They agreed that it was.

The professor then picked up a box of pebbles and poured
them into the jar. He shook the jar lightly.
The pebbles rolled into the open Areas between the golf balls.

He then asked the students again if the jar was full. They agreed it was.

The professor next picked up a box of sand and poured it into the jar.
Of course, the sand filled up everything else.
He asked once more if the jar was full. The students responded with a unanimous 'yes.'

The professor then produced two cups of coffee from under the table and poured the entire contents into the jar, effectively
filling the empty space between the sand. The students laughed.

'Now,' said the professor, as the laughter subsided,
'I want you to recognize that this jar represents your life.
The golf balls are the important things - family,
children, health, Friends, and Favorite passions –
Things that if everything else was lost and only they remained, Your life would still be full.

The pebbles are the other things that matter like your job, house, and car.

The sand is everything else --The small stuff.

'If you put the sand into the jar first,' He continued,
there is no room for the pebbles or the golf balls.
The same goes for life.

If you spend all your time and energy on the small stuff,
You will never have room for the things that are important to you.

So...

Pay attention to the things that are critical to your happiness.
Play With your children.
Take time to get medical checkups.
Take your partner out to dinner.

There will always be time to clean the house and fix the disposal.

'Take care of the golf balls first --
The things that really matter.
Set your priorities. The rest is just sand.

One of the students raised her hand and inquired what the coffee represented.

The professor smiled
'I'm glad you asked'.

It just goes to show you that no matter how full your life may seem,
There’s always room for a couple of cups of coffee with a friend.'



#12189 Poetry on Image (Weekly)

Posted by jaras on 12 September 2012 - 11:33 PM

Uss ne aanchal se nikali mere Dil ki Kitaab
aur chupkey se Muhabbat ka Waraq mor dia

Hum ko maloom tha Anjaam-e-Muhabbat, humne
Aakhri harf se pehle hi Qalam tor dia!!!!


#12008 Biwii Ka Ishq

Posted by Ashk on 11 September 2012 - 01:17 AM

کسی جگہ ایک بوڑھی مگر سمجھدار اور دانا عورت رہتی تھی جس کا خاوند اُس سے بہت ہی پیار کرتا تھا۔

دونوں میں محبت اس قدر شدید تھی کہ اُسکا خاوند اُس کیلئے محبت بھری شاعری کرتا اور اُس کیلئے شعر کہتا تھا۔

عمر جتنی زیادہ ہورہی تھی، باہمی محبت اور خوشی اُتنی ہی زیادہ بڑھ رہی تھی۔

جب اس عورت سے اُس کی دائمی محبت اور خوشیوں بھری زندگی کا راز پوچھا گیا

کہ آیا وہ ایک بہت ماہر اور اچھا کھانا پکانے والی ہے؟

یا وہ بہت ہی حسین و جمیل اور خوبصورت ہے؟

یا وہ بہت زیادہ عیال دار اور بچے پیدا کرنے والی عورت رہی ہے؟

یا اس محبت کا کوئی اور راز ہے؟

تو عورت نے یوں جواب دیا کہ

خوشیوں بھری زندگی کے اسباب اللہ سبحانہ و تعالیٰ کی ذات کے بعد خود عورت کے اپنے ہاتھوں میں ہیں۔ اگر عورت چاہے تو وہ اپنے گھر کو جنت کی چھاؤں بنا سکتی ہے اوراگر یہی عورت چاہے تو اپنے گھر کو جہنم کی دہکتی ہوئی آگ سےبھی بھر سکتی ہے۔

مت سوچیئے کہ مال و دولت خوشیوں کا ایک سبب ہے۔ تاریخ کتنی مالدار عورتوں کی کہانیوں سے بھری پڑی ہے جن کے خاوند اُن کو اُنکے مال متاب سمیت چھوڑ کر کنارہ کش ہو گئے۔

اور نا ہی عیالدار اور بہت زیادہ بچے پیدا کرنے والی عورت ہونا کوئی خوبی ہے۔ کئی عورتوں نے دس دس بچے پیدا کئے مگر نا خاوند اُنکے مشکور ہوئے اور نا ہی وہ اپنے خاوندوں سے کوئی خصوصی التفات اور محبت پا سکیں بلکہ طلاق تک نوبتیں جا پہنچیں۔

اچھے کھانا پکانا بھی کوئی خوبی نہیں ہے، سارا دن کچن میں رہ کرمزے مزے کے کھانے پکا کر بھی عورتیں خاوند کے غلط معاملہ کی شکایت کرتی نظر آتی ہیں اور خاوند کی نظروں میں اپنی کوئی عزت نہیں بنا پاتیں۔

تو پھر آپ ہی بتا دیں اس پُرسعادت اور خوشیوں بھری زندگی کا کیا راز ہے؟ اور آپ اپنے اورخاوند کے درمیان پیش آنے والے مسائل اور مشاکل سے کس طرح نپٹا کرتی تھیں؟

اُس نے جواب دیا: جس وقت میرا خاوند غصے میں آتا تھا اور بلا شبہ میرا خاوند بہت ہی غصیلا آدمی تھا، میں اُن لمحات میں ( نہایت ہی احترام کے ساتھ) مکمل خاموشی اختیار کر لیا کرتی تھی۔ یہاں ایک بات واضح کر دوں کہ احترام کےساتھ خاموشی کا یہ مطلب ہے کہ آنکھوں سے حقارت اور نفرت نا جھلک رہی ہو اور نا ہی مذاق اور سخریہ پن دکھائی دے رہا ہو۔ آدمی بہت عقلمند ہوتا ہے ایسی صورتحال اور ایسے معاملے کو بھانپ لیا کرتا ہے۔

اچھا تو آپ ایسی صورتحال میں کمرے سے باہر کیوں نہیں چلی جایا کرتی تھیں؟

اُس نے کہا: خبردار ایسی حرکت مت کرنا، اس سے تو ایسا لگے گا تم اُس سے فرار چاہتی ہو اور اُسکا نقطہ نظر نہیں جاننا چاہتی، خاموشی تو ضروری ہے ہی، اس کے ساتھ ساتھ خاوند جو کچھ کہے اُسے نا صرف یہ کہ سُننا بلکہ اُس کے کہے سے اتفاق کرنا بھی اُتنا ہی اشد ضروری ہے۔ میرا خاوند جب اپنی باتیں پوری کر لیتا تو میں کمرے سے باہر چلی جایا کرتی تھی، کیونکہ اس ساری چیخ و پکار اور شور و شرابے والی گفتگو کے بعد میں سمجھتی تھی کہ اُسے آرام کی ضرورت ہوتی تھی۔ کمرے سے باہر نکل کر میں اپنے روزمرہ کے گھریلو کام کاج میں مشغول ہو جاتی تھی، بچوں کے کام کرتی، کھانا پکانے اور کپڑے دھونے میں وقت گزارتی اور اپنے دماغ کو اُس جنگ سے دور بھگانے کی کوشش کرتی جو میری خاوند نے میرے ساتھ کی تھی۔

تو آپ اس ماحول میں کیا کرتی تھیں؟ کئی دنوں کیلئے لا تعلقی اختیار کرلینا اور خاوند سے ہفتہ دس دن کیلئے بول چال چھوڑ دینا وغیرہ؟

اُس نے کہا: نہیں، ہرگز نہیں، بول چال چھوڑ دینے کی عادت انتہائی گھٹیا فعل اور خاوند کے ساتھ تعلقات کو بگاڑنے کیلئے دو رُخی تلوار کی مانند ہے۔ اگر تم اپنے خاوند سے بولنا چھوڑ دیتی ہو تو ہو سکتا ہے شروع شروع میں اُس کیلئے یہ بہت ہی تکلیف دہ عمل ہو۔ شروع میں وہ تم سے بولنا چاہے گا اور بولنے کی کوشش بھی کرے گا۔ لیکن جس طرح دن گزرتے جائیں گے وہ اِس کا عادی ہوتا چلا جائے گا۔ تم ایک ہفتہ کیلئے بولنا چھوڑو گی تو اُس میں تم سے دو ہفتوں تک نا بولنے کی استعداد آ جائے گی اور ہو سکتا ہے کہ تمہارے بغیر بھی رہنا سیکھ لے۔ خاوند کو ایسی عادت ڈال دو کہ تمہارے بغیر اپنا دم بھی گھٹتا ہوا محسوس کرے گویا تم اُس کیلئے آکسیجن کی مانند ہو اور تم وہ پانی ہو جس کو پی کر وہ زندہ رہ رہا ہے۔اگر ہوا بننا ہے تو ٹھنڈی اور لطیف ہوا بنو نا کہ گرد آلود اور تیز آندھی۔

اُس کے بعد آپ کیا کیا کرتی تھیں؟

اُس عورت نے کہا: میں دو گھنٹوں کے بعد یا دو سے کچھ زیادہ گھنٹوں کے بعد جوس کا ایک گلاس یا پھر گرم چائے کا یک کپ بنا کر اُس کے پاس جاتی، اور اُسے نہایت ہی سلیقے سے کہتی، لیجیئے چائے پیجیئے۔ مجھے یقین ہوتا تھا کہ وہ اس لمحے اس چائے یا جوس کا متمنی ہوتا تھا۔ میرا یہ عمل اور اپنے خاوند کے ساتھ گفتگو اسطرح ہوتی تھی کہ گویا ہمارے درمیان کوئی غصے یا لڑائی والی بات ہوئی ہی نہیں۔

جبکہ اب میرا خاوند ہی مجھ سے اصرار کر کے بار بار پوچھتا تھا کہ کیا میں اُس سے ناراض تو نہیں ہوں۔جبکہ میرا ہر بار اُس سے یہی جواب ہوتا تھا کہ نہیں میں تو ہرگز ناراض نہیں ہوں۔ اسکے بعد وہ ہمیشہ اپنے درشت رویئے کی معذرت کرتا تھا اور مجھ سے گھنٹوں پیار بھری باتیں کرتا تھا۔

تو کیا آپ اُس کی ان پیار بھری باتوں پر یقین کر لیتی تھیں؟

ہاں، بالکل، میں اُن باتوں پر بالکل یقین کرتی تھی۔ میں جاہل نہیں ہوں۔

کیا تم یہ کہنا چاہتی ہو کہ میں اپنے خاوند کی اُن باتوں پر تو یقین کر لوں جو وہ مجھ سے غصے میں کہہ ڈالتا تھا اور اُن باتوں پر یقین نا کروں جو وہ مجھے پر سکون حالت میں کرتا تھا؟ غصے کی حالت میں دی ہوئی طلاق کو تو اسلام بھی نہیں مانتا، تم مجھ سے کیونکر منوانا چاہتی ہو کہ میں اُسکی غصے کی حالت میں کہی ہوئی باتوں پر یقین کرلیا کروں؟

تو پھر آپکی عزت اور عزت نفس کہاں گئی؟

کاہے کی عزت اور کونسی عزت نفس؟ کیا عزت اسی کا نام ہے تم غصے میں آئے ہوئے ایک شخص کی تلخ و ترش باتوں پر تو یقین کرکے اُسے اپنی عزت نفس کا مسئلہ بنا لومگر اُس کی اُن باتوں کو کوئی اہمیت نا دو جو وہ تمہیں پیار بھرے اور پر سکون ماحول میں کہہ رہا ہے!
میں فوراً ہی اُن غصے کی حالت میں دی ہوئی گالیوں اور تلخ و ترش باتوں کو بھلا کر اُنکی محبت بھری اور مفید باتوں کو غور سے سنتی تھی۔

جی ہاں، خوشگوار اور محبت بھری زندگی کا راز عورت کی عقل کے اندر موجود تو ہے مگر یہ راز اُسکی زبان سے بندھا ہوا ہے۔




#1145 Wildlife Image Thread

Posted by Daanie on 22 May 2012 - 07:06 PM

Posted Image

Posted Image

Posted Image

Posted Image

Posted Image

Posted Image