Jump to content


Photo

dukhtii shairii

shairy

  • Please log in to reply
29 replies to this topic

#1 Ashk

Ashk

    Dedicated Member

  • Senior Member
  • 10,216 posts
  • LocationLahore

Posted 12 December 2013 - 09:04 PM

جیسے ننگے پاؤں اور
پھٹے پرانے کپڑوں والے بچے
اپنی خالی جیبوں کا احساس لئے
دل کو اچھی لگنے والی
مہنگی چیزیں
کسی دکان کے بند شیشوں سے
پہروں لگ کر تکتے ہیں نا
میں بھی تم کو یونہی جاناں
اکثر تکتا رہتا ہوں



Posted Image


#2 Ashk

Ashk

    Dedicated Member

  • Senior Member
  • 10,216 posts
  • LocationLahore

Posted 12 December 2013 - 09:05 PM

تسخیر مہر و ماہ مبارک تجھے مگر
دل میں اگر نہیں تو کہیں روشنی نہیں



Posted Image


#3 Ashk

Ashk

    Dedicated Member

  • Senior Member
  • 10,216 posts
  • LocationLahore

Posted 12 December 2013 - 09:06 PM

مجھے وحشت ہے رونق سے
مجھے سنسان رہنے دو......



Posted Image


#4 Ashk

Ashk

    Dedicated Member

  • Senior Member
  • 10,216 posts
  • LocationLahore

Posted 12 December 2013 - 09:07 PM

ہر بھکاری پا نہیں سکتا مقامِ خواجگی
ہر کس و ناکس کو تیرا غم عطا ہوتا نہیں



Posted Image


#5 Ashk

Ashk

    Dedicated Member

  • Senior Member
  • 10,216 posts
  • LocationLahore

Posted 12 December 2013 - 09:07 PM

ﺭﻧﮓ ﺑﮭﺮﺗﮯ ﮨﻮ ﺑﮩﺖ ﺧﻮﺏ ﺧﯿﺎﻟﻮﮞ ﻣﯿﮟ
ﮐﯿﺎ ﻣﯿﺮﮮ ﮐﺮﺏ ﮐﯽ ﺗﺼﻮﯾﺮ ﺑﻨﺎ ﺳﮑﺘﮯ ﮨﻮ



Posted Image


#6 Ashk

Ashk

    Dedicated Member

  • Senior Member
  • 10,216 posts
  • LocationLahore

Posted 12 December 2013 - 09:08 PM

سنا ھے توڑ دیتے ھیں
شکوے ساتھ صدیوں کے



Posted Image


#7 Ashk

Ashk

    Dedicated Member

  • Senior Member
  • 10,216 posts
  • LocationLahore

Posted 12 December 2013 - 09:08 PM

جو میرے ضبط کا شیرازہ منتشر کر دے
تیرے ستم کو ابھی __ وہ ادا نہیں آئی



Posted Image


#8 Ashk

Ashk

    Dedicated Member

  • Senior Member
  • 10,216 posts
  • LocationLahore

Posted 12 December 2013 - 09:10 PM

مجھے شادابی صحنِ چمن سے خوف آتا ہے
یہی انداز تھے جب لُٹ گئی تھی زندگی اپنی



Posted Image


#9 Ashk

Ashk

    Dedicated Member

  • Senior Member
  • 10,216 posts
  • LocationLahore

Posted 12 December 2013 - 09:16 PM

کون جانے، کون سمجھے، کون سمجھائے نصیر
عابد و مـعـبـود کی جو گـفـتـگو سجـدے میں ہے



Posted Image


#10 Ashk

Ashk

    Dedicated Member

  • Senior Member
  • 10,216 posts
  • LocationLahore

Posted 12 December 2013 - 09:22 PM

جب زبان پر چپُ کے تالے لگ جائیں
تو دل میں اُٹھنے والے طوفاں
اندر ہی اندر توڑ پھوڑ کرتے رہتے ہیں
ذہن میں اُٹھتی سوچیں
وجود کو ہلا کے رکھ دیتی ہیں
آنکھوں میں بننے والے عکس دھندلے ہوکر
پلکوں کے پار کہیں گمُ ہوجا تے ہیں
تو پھر الفاظ یونہی کاغذ پر اُترنے لگتے ہیں

جن کو تم شعر ‘ کہتے ہو ۔ ۔ ۔ !...

اسے ہم ‘ عذاب ِ شعور کہتے ہیں ۔ ۔ ۔

 


Posted Image


#11 Ashk

Ashk

    Dedicated Member

  • Senior Member
  • 10,216 posts
  • LocationLahore

Posted 12 December 2013 - 09:23 PM

ﺧﺰﺍﮞ ﮐﺎ ﻣﻮﺳﻢ ﺗﯿﺮﯼ ﺑﮯﺭﺧﯽ ﮐﻮ ﮐﮩﺘﮯ ﮨﯿﮟ..
ﺑﮩﺎﺭ ﺗﯿﺮﯼ ﺗﻮﺟﮧ ﮐﺎ ﻧﺎﻡ ﮨﮯ ﺷﺎﺋﺪ..



Posted Image


#12 Ashk

Ashk

    Dedicated Member

  • Senior Member
  • 10,216 posts
  • LocationLahore

Posted 12 December 2013 - 09:29 PM

عمرِ عزیز بھول بھلیّاں میں کٹ گئی
جو بھی ملا وہ ایک پہیلی سُنا گیا



Posted Image


#13 Ashk

Ashk

    Dedicated Member

  • Senior Member
  • 10,216 posts
  • LocationLahore

Posted 12 December 2013 - 09:31 PM

مرے غم کی عمر دراز کر ، مرے دردِ دل کو دوام دے
میں دعا بدست ہوں اے خدا ! کوئی خاص شے مجھے عام دے



Posted Image


#14 Ashk

Ashk

    Dedicated Member

  • Senior Member
  • 10,216 posts
  • LocationLahore

Posted 12 December 2013 - 09:32 PM

دل ہے کہ ٹوٹتا ہی چلا جائے ہے مگر
امکاں میں ایک صورتِ تعمیر اب بھی ہے

 



Posted Image


#15 Ashk

Ashk

    Dedicated Member

  • Senior Member
  • 10,216 posts
  • LocationLahore

Posted 12 December 2013 - 09:33 PM

باتوں باتوں میں عمر بیت گئی
ہاں مگر ایک اَن کہی اے دوست



Posted Image


#16 Ashk

Ashk

    Dedicated Member

  • Senior Member
  • 10,216 posts
  • LocationLahore

Posted 12 December 2013 - 09:34 PM

بسا ہوا تھا مرے دل میں ، درد جیسا تھا
وہ اجنبی تھا مگر گھر کے فرد جیسا تھا
کبھی وہ چشمِ تصوّر میں عکس کی صورت
کبھی خیال کے شیشے پہ گرد جیسا تھا
جدا ہوا نہ لبوں سے وہ ایک پل کے لیے
کبھی دعا تو کبھی آہِ سرد جیسا تھا
سفر نصیب مگر بے جہت مسافر تھا
وہ گرد باد سا ، صحرا نورد جیسا تھا
جنم کا ساتھ نبھایا نہ جا سکا عاجزؔ
وہ شاخِ سبز تو میں برگِ زرد جیسا تھا



Posted Image


#17 Ashk

Ashk

    Dedicated Member

  • Senior Member
  • 10,216 posts
  • LocationLahore

Posted 12 December 2013 - 09:36 PM

اُڑنے لگتا ہے ہوا میں آدمی
خواہشوں کے جب نکل آتے ہیں پر



Posted Image


#18 Ashk

Ashk

    Dedicated Member

  • Senior Member
  • 10,216 posts
  • LocationLahore

Posted 12 December 2013 - 09:37 PM

دعویٰ ِ پارسائی اپنی جگہ
اعترافِ گناہ لازم ہے



Posted Image


#19 Ashk

Ashk

    Dedicated Member

  • Senior Member
  • 10,216 posts
  • LocationLahore

Posted 12 December 2013 - 09:39 PM

آنکھوں آنکھوں ہجرت کرنا اُس کو تھا مرغوب
ورنہ اپنے خواب جزیرے کم آباد نہ تھے

 



Posted Image


#20 Ashk

Ashk

    Dedicated Member

  • Senior Member
  • 10,216 posts
  • LocationLahore

Posted 12 December 2013 - 10:57 PM

اشک بَن کر چھلک گیا آخر
غم مرے ظرف سے ِسوا نکلا

 



Posted Image





0 user(s) are reading this topic

0 members, 0 guests, 0 anonymous users